19 Apr, 2024 | 10 Shawwal, 1445 AH

Question #: 3137

April 06, 2023

Agar Kisi waja sa qurbani peechay Wala sal ma nai ki or karna k Kaha tha lakin na kar sakay to kiya ab es Eid p wo qurbani b kar saktay hn Wohi qurbani karday ya 2kary or dosri qurbani ki Fursat b na ho to prechay wali ada karay ya is sal ki ada karay ya 2karay or niyat kasa karay tafseel

Answer #: 3137

الجواب حامدا ومصلیا

            اگرقربانی کے ایام گزرجائیں اورصاحب نصاب شخص نے قربانی ہی نہ کی تواب قربانی کی قضاء تونہیں ہوتی البتہ اس صورت میں ایک متوسط بکرا یا بکری یا اس کی قیمت صدقہ کرنا ضروری ہے۔

            لہذا صورت مسؤلہ آپ  گزشتہ سال کی قربانی کے بدلے ایک کے بجائے دو جانور ذبح نہیں کریں گے بلکہ ایک متوسط بکرا یا بکری یا اس کی قیمت صدقہ کریں گے۔ اور رواں سال بھی صاحب نصاب ہونے کی سورت میں ایک قربانی کرنی ہوگی۔

والله اعلم بالصواب

احقرمحمد ابوبکر صدیق غَفَرَاللہُ لَہٗ

دارالافتاء ، معہد الفقیر الاسلامی، جھنگ